New Zealand

سوال # 157938

کن حدود تک عورت سر کے بال کاٹ سکتی ہے اور کب اور کب نہیں کرسکتی؟ براہ کرم، مکمل اور مفصل بیان فرمائیں۔

Published on: Jan 3, 2018

جواب # 157938

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:394-313/SD=4/1439



عورت کے لیے سر کے بالوں کا کٹوانا جائز نہیں ہے ؛ البتہ جو بال زیادہ ادھر اُدھر نکل رہے ہوں ، اُن کا کاٹ کر بالوں کو درست کر لیا جائے ، تو اس کی گنجائش ہے ، اسی طرح اگر کسی بیماری کے علاج کے لیے بالوں کا کٹوانا ضروری ہو،تو بقدر ضرورت کٹوانے کی گنجائش ہے ۔ قطعت شعر رأسہا ، أثمت و لعنت (الدر المختار مع رد المحتار : ۵۸۳/۹، ط: زکریا، دیوبند )ولو حلقت المرأة رأسہا فان فعلت لوجع أصابھا، لا بأس بہ (الفتاوی الہندیة : ۴۱۴/۵، ط: اتحاد )۔ 



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات