عبادات - صلاة (نماز)

Pakistan

سوال # 171471

میں ابیٹ آباد میں رہتاہوں اور ہمارے ایک رشتہ دار ٹیکسیلا میں رہتے ہیں، ابیٹ آباد سے ٹیکسیلا کے لیے دو راستے ہیں، اگر موٹروے سے جائیں تو ہمیں ۹۰ کلو میٹر کا طے کرنا ہوتاہے جب کہ جی ٹی روڈ سے اگر جائیں تو ۷۰ کلو میٹر کا ، پوچھنا چاہتاہوں کہ اگر ہم ٹیکسیلا جائیں موٹروسے سے تو پوری نماز پڑھنی ہوگی یا قصر؟

Published on: Jul 22, 2019

جواب # 171471

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:1212-1064/L=11/1440



موٹروے سے جانے کی صورت میں آپ مسافر ہوجائیں گے اورقصر نماز ادا کریں گے ۔



وتعتبر المدة من أی طریق أخذ فیہ، کذا فی البحر الرائق فإذا قصد بلدة وإلی مقصدہ طریقان أحدہما مسیرة ثلاثة أیام ولیالیہا والآخر دونہا فسلک الطریق الأبعد کان مسافرا عندنا، ہکذا فی فتاوی قاضی خان، وإن سلک الأقصر یتم، کذا فی البحر الرائق.(الفتاوی الہندیة 1/ 138)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات