عقائد و ایمانیات - فرق ضالہ

Pakistan

سوال # 29695

محترم مفتی صاحب
السلام علیکم
میں پی ایچ ڈی کا طاب علم ہوں میرا تعلق حنفی العقیدہ سنی مکتب فکر سے ہے میری پھوپھی کا نکاح ایک شیعہ اثنا عشری سے ہوا تھا ہم 2 بھائ اور 3 بہنیں ہیں میرے والد صاحب نے میری بہن کا نکاح اپنی زندگی میں میری پھوپھی کے بیٹے سے کردیا جو انکم ٹیکس آفیسر ہے چونکہ میرے پھوپھا جی شیعہ اثنا عشری ہیں جب کہ میری پھوپھی سنی ہیں اور ان کا بیٹا جو کہتا ہے میں شیعہ ہوں لیکن یا علی مدد کہنا شرک تصور کرتا ہوں صحابہ کرام پر تبرا بھی حرام سمجھتا ہوں اور قرآن کریم کی تحریف کا قائل بھی نہیں ہوں جب کہ وہ کہتا ہے کہ میں شیعہ اثنا عشری عقیدہ امامت کی وجہ سے ہوں اور عقیدہ امامت کیلئے اس نے مجھے ایک کتاب (تحفہ العوام) جس کی حیثیت اں کے نزدیک ایسے ہے جیسے ہمارے ہاں (بہشتی زیور) میرے کزن یعنی میری پھوپھی کے بیٹے نے وہ کتاب مجھے دی ہے اور کہا کہ ائمہ کے بارے میں جو کچھ اس کتاب میں لکھا ہے وہ میرا ایمان ہے اور میں اس پر پکا یقین رکھتا ہوں اس کتاب تحفہ العوام میں اہل تشیع کے اصول دین لکھے ہوئے ھیں جن میں امامت کی تفصیل کچھ یوں ہے
عبارت ملاحظہ فرمائیں
انبیا و مرسلین کی طرح امام بھی منصوص و مامور من اللہ ہوتے ہیں جس طرح اور نبیوں کے وصی و جانشین خدا کی جانب سے مقرر ہوئے ہیں اسی طرح سے ہمارے پیغمبر ص کے وصی و جانشین بھی خدا کی طرف سے معین و مقرر ہوئے ہیں لھذا ان کا معصوم اور مالک علم لدنی ہونا اور جمیع اوصاف معصومین خدا سے ان کا متصف ہونا ضروری و لازمی ہے اور تا قیام قیامت ان کی امامت کا باقی رہنا بھی لازمی ہے
ان کی اطاعت فرض ہے اور ان میں سے ہر بزرگ نے متواتر معجزے دکھائے جو مبسوط کتب میں درج ہیں
محترم مفتی صاحب میرا کزن اس عقیدے کا حامل شیعہ ہے مجھے اب اس سے منسوب اپنی منکوحہ بہن کی رخصتی کا کہا جا رہا ہے میری یونیورسٹی کے امام مسجد نے کہا کہ تمہاری بہن کا تمہارے کزن سے نکاح نہیں ہوا کیونکہ تمہارا کزن عقیدہ امامت کی وجہ سے قادیانیوں کی طرح ختم نبوت کا منکر ہے جب کہ میرے اوپر خاندانی دباؤ ہے کہ میں اپنی بہن کی رخصتی کروں قرآن و سنت کی روشنی میں میری رہنمائی فرمائیں
(1) کیا میرا کزن جو شیعہ اثنا عشری ہے عقیدہ امامت کی وجہ سے قادیانیوں کی طرح ختم نبوت کا منکر ہے ?
(2) کیا میری بہن کا نکاح اس سے واقع نہیں ہوا ?
(3) جو کاغذی نکاح میرے والد مرحوم کر کے گئے اس کی حیٹیت کیا ہے ?

Published on: Feb 21, 2011

جواب # 29695

بسم الله الرحمن الرحيم

فتوی(ل):347=94-3/1432

اثنا عشری شیعہ عقیدہ امامت اوردیگر عقائد جو ان کی کتابوں میں مذکور ہیں کی بنا پر دائرہٴ اسلام سے خارج ہیں، ایسے شیعہ سے سنی العقیدہ لڑکی کا نکاح نہیں ہوسکتا، اس لیے آپ کی بہن کا نکاح آپ کے کزن سے درست نہیں ہوا، آپ کے والد نے جو نکاح کردیا تھا شرعاً اس کا اعتبار نہیں ہے، آپ اپنی بہن کو وہاں رخصت نہ کریں۔

واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات