متفرقات - اسلامی نام

India

سوال # 154924

حضرت، میں نے اپنی دوسری بیٹی کا نام ”امیرة“ (Ameerah) (الف، میم، یاء، راء، گول تاء/ ہاء) رکھا ہے، وہ اب پانچ سال کی ہے، کیا یہ نام صحیح ہے یا اس کو بدل دینا چاہئے؟

Published on: Oct 26, 2017

جواب # 154924

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:23-17/M=2/1439



بیٹی کا نام ”امیرہ“ رکھ سکتے ہیں اگر بدل کر اس سے بہتر نام رکھنا چاہیں تو اس میں بھی حرج نہیں۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات