• Miscellaneous >> Others

    Question ID: 400168Country: India

    Title:

    18/ سال بیمار رہ كر میرے والد انتقال كرگئے‏، اس دوران میں ان سے نہیں ملا اور نہ ان كی كوئی خدمت كرسكا‏، اب كیا كرسكتا ہوں؟

    Question: میرے ابا بیمار تھے، اور ۱۸سالوں میں ان سے نہیں ملا تھا، ان کی طبیعت بہت خراب تھی، مگر میری امی مجھے ان کے پاس جانے سے منع کرتی تھیں، چار دن پہلے ان کا انتقال ہوگیا ہے، میری یہ نیت تھی کہ میں جب اپنے شہر واپس آؤں گا تو اپنے ابا سے ملوں گا ، مگر جب میں وہاں پہنچا تو ابا کو کچھ ہوش نہیں تھا اور اسی دن وہ دنیا سے گذر گئے، میری دادی اور چچا زندہ ہیں، کیا میری مغفرت ہوجائے گی، کیوں کہ میں نے تو اپنے باپ کی خدمت نہیں کی؟ اب مجھے کیا کرنا چاہئے؟

    Answer ID: 400168Posted on: 04-Feb-2021

    Fatwa : 524-373/B=06/1442

     یہ بڑی سنگ دلی کی بات ہے کہ آپ کے والد صاحب 18 سال بیمار رہے، ایسی حالت میں آپ نے ان کی خدمت کرکے جنت حاصل نہ کی، حتی کہ اتنی طویل مدت میں انہیں دیکھنے بھی نہ گئے، یہ آپ کا بہت بڑا قصور ہے۔ اس لئے اپنی مغفرت کے لئے اور والد صاحب کی مغفرت کے لئے خوب خوب دعائیں کریں اور والد صاحب کے لئے ہر روز زندگی بھر ایصال ثواب بھی کرتے رہیں۔

    Darul Ifta,

    Darul Uloom Deoband, India