Social Matters >> Food & Drinks

Question # : 56918

United Arab Emirates

میں دبئی میں رہتاہوں، یہاں زیادہ ترگوشت اورچکن برازیل سے سپلائی ہوتاہے، گوشت کی پیکنگ پر ”حلال“ لکھا ہوا ہوتاہے ،اور اس میں ابو ذہبی حکومت کی تصدیق ہوتی ہے، یہ لکھا نہیں ہوتاہے کہ یہ ہاتھ یا مشینی ذبیحہ کا گوشت ہے ؟اس صورت میں میں نے کئی مفتیان کرام سے پوچھا تو اس بارے میں ان کی رائے الگ ہے، کچھ لوگ کہتے ہیں کہ یہ حلال ہے، اور کچھ اس کو حرام کہتے ہیں، اسی گوشت اورچکن کا استعمال مکہ اور مدینہ کے حرم شریف کے ہوٹلوں میں بھی ہوتاہے ۔ میرا سوال یہ ہے کہ میں یہ گوشت کھاؤں یا نہیں؟ براہ کرم، صحیح جواب دیں۔

Answer : 56918

Published on: Jan 8, 2015

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa ID: 249-276/L=3/1436-U

باہر ممالک سے جو گوشت عرب ممالک میں آتا ہے اور گوشت کی پیکنگ پر حلال لکھا ہوتا ہے، اسکے بارے میں اگرچہ قطعی طور پر حرمت کا فیصلہ نہیں کیا جاسکتا تاہم جب تک گوشت کے بارے میں پورا اطمینان نہ ہوجائے کہ یہ صحیح شرعی طریقہ پر ذبح کیا گیا ہے کھانے سے احتراز کرنا چاہیے، کیونکہ یہ بات پائے ثبوت تک پہنچ چکی ہے کہ یہ شہادت قابل اعتماد نہیں اور گوشت کے اندر اصل حرمت اور ممانعت ہی ہے۔


Allah knows Best!


Darul Ifta,
Darul Uloom Deoband

Related Question