• عبادات >> زکاة و صدقات

    سوال نمبر: 68098

    عنوان: کیا ان مدارس میں زکاة دینے سے زکاة ادا ہوجائے گی؟

    سوال: ہم مدرسے میں زکاة دیتے ہیں، جب کہ ہمارے یہاں جو مدارس ہیں ان میں صاحب نصاب طلبہ بھی پڑھتے ہیں تو کیا ان مدارس میں زکاة دینے سے زکاة ادا ہوجائے گی؟

    جواب نمبر: 68098

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 1259-1288/L=11/1437

    بالعموم مدارس کے طلبہ صاحب نصاب نہیں ہوتے بعضے طلبہ گھریلو اعتبار سے مالدار ضرور ہوتے ہیں مگر اگر وہ بالغ ہیں تو گھریلو اعتبار سے ماں یا باپ کا صاحب نصاب ہونا مانع اخذ زکوة نہ ہوگا، اور واقعی جو طلباء خود صاحب نصاب ہوتے ہیں وہ بالعموم زکوة وغیرہ کی رقم نہیں لیتے بلکہ کھانا خود رقم جمع کرکے لیتے ہیں اور دیگر وظائف قبول نہیں کرتے، اس کے باوجود اگر کوئی بالغ صاحب نصاب طالب علم زکوة کی رقم اپنے اوپر استعمال کرے تو اس کا وبال اس پر ہوگا زکوة دہندگان کی زکوة ادا ہوجائے گی۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند