• عبادات >> اوقاف ، مساجد و مدارس

    سوال نمبر: 42495

    عنوان: مدارس کے چندہ وصولی کے لئے مساجد میں الان.

    سوال: ۱-کیا سفیروں کا مدارس-مساجد کے لئے چندہ اعلان مسجد میں کرنا جائز ہے؟ ۲-جبکے سفیر کا اداروں سے کمیشن یا اجرت طے ہوتی ہے؟ -کیا مذکورہ شرائط طے ہونے کے بعد چندے کے لئے مسجد کا استمال جائز ہے؟

    جواب نمبر: 42495

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 7-10/N=1/1434 مساجد اور مدراس وغیرہ کی ضروریات کے لیے مسجد میں چندہ کا اعلان کرنا جائز ودرست ہے۔ (فتاویٰ دارالعلوم دیوبند: ۱۴/۲۲۹، ۱۷/۳۰۲-۳۰۴) کیونکہ یہ دینی کام ہے اور سفرا کے حق میں بھی اس میں خدمت دین کا پہلو غالب ہے کیونکہ تنخواہ واجرت اس میں بربنائے ضرورت اور تبعاً وضمناً ہوتی ہے، ہاں البتہ اس کا خیال رکھا جائے کہ اعلان کی وجہ سے نمازیوں کی نماز میں کوئی خلل یا انھیں کوئی اذیت وغیرہ نہ ہو۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند