• عقائد و ایمانیات >> قرآن کریم

    سوال نمبر: 600450

    عنوان: ناپاك كپڑے پہن كر  تلاوت كرنا؟

    سوال:

    جب احتلام ہو جائے اور کپڑے ناپاک ہو جائے اور نہا بھی لے لیکن کپڑے نہ بدلے اور اسی کپڑوں کے ساتھ قران پڑے تو کیا یہ جائز ہے ؟

    جواب نمبر: 600450

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa:116-74/sd=3/1442

     فقہائے کرام نے نجاست کے قریب قرآن کی تلاوت کو مکروہ قرار دیا ہے۔ وذکروا أن محل الکراہة اذا کان قریبا منہ۔ ( شامی:۳/۸۵، زکریا ) پس ناپاک کپڑے پہنے ہوئے قرآن کی تلاوت کرنا بدرجہ اولی مکروہ ہوگا، قرآن کی عظمت و تقدس کا تقاضا یہ ہے کہ پورے ادب واحترام کے ساتھ تلاوت کی جائے ۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند