• متفرقات >> تصوف

    سوال نمبر: 11241

    عنوان:

    مجھے یہ جاننا ہے کہ تصوف میں (۱)سلسلہ رفاہی کی کیا حقیقت ہے؟ کیا اس سلسلے کے کوئی شیخ یا خلیفہ (پیر) ہندوستان میں (یا کہیں بھی) حال میں موجود ہیں؟ (۲)بیعت کون لے سکتے ہیں؟ (۳)مرید کون بناسکتے ہیں؟ (۴)سجدہ نشین کی کیا حقیقت ہے؟ (۵)سلسلہ رفاہی میں کیے جانے والے اذکار (ذکر کی کوئی کتاب کا نام) آپ بتادیں۔ اللہ آپ کو جزائے خیر عطا کرے۔

    سوال:

    مجھے یہ جاننا ہے کہ تصوف میں (۱)سلسلہ رفاہی کی کیا حقیقت ہے؟ کیا اس سلسلے کے کوئی شیخ یا خلیفہ (پیر) ہندوستان میں (یا کہیں بھی) حال میں موجود ہیں؟ (۲)بیعت کون لے سکتے ہیں؟ (۳)مرید کون بناسکتے ہیں؟ (۴)سجدہ نشین کی کیا حقیقت ہے؟ (۵)سلسلہ رفاہی میں کیے جانے والے اذکار (ذکر کی کوئی کتاب کا نام) آپ بتادیں۔ اللہ آپ کو جزائے خیر عطا کرے۔

    جواب نمبر: 11241

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 424=297/ل

     

    یہ سلسلہ شاید سید احمد رفاعی رحمہ اللہ کی طرف منسوب ہے، میری معلومات کے مطابق اس سلسلے کا کوی پیر ہندوستان میں موجود نہیں ہے۔

    (۲) (۳) بیعت کے لیے شیخ ایسا ہونا چاہیے جو بقدر ضرورت علم دین رکھتا ہو، عقائد حقہ، اخلاق فاضلہ، اعمال صالحہ کے ساتھ متصف ہو، حب جاہ، حب مال، ریا کبر، حسد وغیرہ اخلاقِ رذیلہ کی اصلاح کسی شیخ محقق کی تربیت میں رہ کی کرچکا ہو اوراس شیخ محقق نے اس پر اعتماد کیا ہو، بدعات سے پرہیز کرتا ہو، متبع سنت ہو۔

    (۴) سجادہ نشین اپنے شیخ کا نائب ہوتا ہے، اور اس کی وفات کے بعد وہی اپنے شیخ کے مشن کو آگے بڑھاتا ہے، لہٰذا اس میں بھی مذکورہ بالا صفات کا ہونا ضروری ہے۔

    (۵) مجھے اس کا علم نہیں۔

    سجادہ نشینی کوئی شرعی یا دینی چیز نہیں ہے، شیخ کی جگہ پر کام کرنے والے کو سجادہ نشین کہہ دیتے ہیں، شرعی حقیقت اس کی کچھ نہیں ہے۔ (د)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند