• معاشرت >> طلاق و خلع

    سوال نمبر: 37078

    عنوان: اگر کسی شخص نے بغیر نیت طلاق کے اپنی بیوی سے کہا "تو مجھ پر حرام ہے اور میں تجھے ہاتھ نہیں لگاؤں گا" یہ الفاظ کہے تو ایسی صورت میں طلاق ہوئی یا نہیں؟

    سوال: اگر کسی شخص نے بغیر نیت طلاق کے اپنی بیوی سے کہا "تو مجھ پر حرام ہے اور میں تجھے ہاتھ نہیں لگاؤں گا" یہ الفاظ کہے تو ایسی صورت میں طلاق ہوئی یا نہیں؟

    جواب نمبر: 37078

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(م): 431=431-3/1433 جو شخص مذکورہ الفاظ اپنی بیوی سے کہنے کا قائل ہے اس کی بیوی پر ایک طلاق بائن پڑگئی، وإن الحرام في الأصل کنایة یقع بہا البائن، لأنہ لما غلب استعمالُہ في الطلاق لم یبق کنایة، ولذا لم یتوقف علی النیة أو دلالة الحال إلخ (الشامي زکریا: ۴/۵۳۰)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند