• معاشرت >> طلاق و خلع

    سوال نمبر: 17654

    عنوان:

    طلاق رجعی، بائن، مغلظہ کی کیا تعریف ہے؟ (۲)طلاق بائن کے کتنے عرصہ بعد تک رجوع کی گنجائش ہے؟ (۳)کیا طلاق بائن کے بعد بھی حلالہ کروانا پڑتا ہے؟

    سوال:

    طلاق رجعی، بائن، مغلظہ کی کیا تعریف ہے؟ (۲)طلاق بائن کے کتنے عرصہ بعد تک رجوع کی گنجائش ہے؟ (۳)کیا طلاق بائن کے بعد بھی حلالہ کروانا پڑتا ہے؟

    جواب نمبر: 17654

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(م):1744=1744-11/1430

     

    [طلاق رجعی] یہ ہے کہ صاف اورصریح لفظوں میں ایک یا دو مرتبہ طلاق دی جائے، طلاق بائن یہ ہے کہ گول مول لفظ کہے یعنی طلاق کی نیت سے کنائی الفاظ استعمال کرے یا طلاق کے ساتھ کوئی ایسی صفت ذکر کی جائے جس سے اس کی سختی کا اظہار ہو مثلاً یوں کہے کہ․․․ [تجھ کو سخت طلاق] یا کہے [تجھ کولمبی چوڑی طلاق] یاصریح لفظ کہے کہ میں نے تجھ کو طلاق بائن دی۔ طلاق مغلظہ یہ ہے کہ تین طلاق دے۔

    (۲) طلاق بائن کے بعد فوراً نکاح ختم ہوجاتا ہے، رجعت کی گنجائش نہیں رہتی، البتہ عدت کے اندر اور عدت کے بعد بتراضی طرفین نکاح جدید ہوسکتا ہے۔

    (۳) نہیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند