• معاشرت >> طلاق و خلع

    سوال نمبر: 17569

    عنوان:

    یہ سوال بغیر الفاظ ادا کئے ہوئے طلاق کے بارے میں ہے۔ میں یہ سوال اپنی ایک رشتہ دار عورت کی طرف سے بھیج رہا ہوں۔ ایک جوڑے نے چودہ سال پہلے شادی کی ، دو بچے ہیں، ان کے تعلقات اتنے خراب چل رہے ہیں کہ انھوں نے گزشتہ پانچ سال سے جسمانی تعلقات قائم نہیں کئے ہیں۔ دونوں طرف سے صحت سے متعلق کوئی مسئلہ نہیں ہے۔استطاعت کے باوجود شوہر بیوی اور بچوں کی ضروریات کو پوری نہیں کررہا ہے۔ وہ لوگ ایک ہی کمرے میں ایک ساتھ رہتے ہیں لیکن ایک دوسرے سے بات نہیں کرتے ہیں۔ (۱)یہ بات عورت کے علم میں آئی ہے کہ [اتنے طویل عرصہ تک جماع نہ کرنے سے طلاق واقع ہوجاتی ہے]۔ کیا یہ درست ہے؟(۲)کیا وہ اپنے شوہر کے ساتھ اس وقت حلال زندگی بسر کررہی ہے؟ (۳) اگر اس سے طلاق نہیں واقع ہوتی ہے تو کیا اس سے نکاح پر اثر پڑتا ہے، اور کیسے؟

    سوال:

    یہ سوال بغیر الفاظ ادا کئے ہوئے طلاق کے بارے میں ہے۔ میں یہ سوال اپنی ایک رشتہ دار عورت کی طرف سے بھیج رہا ہوں۔ ایک جوڑے نے چودہ سال پہلے شادی کی ، دو بچے ہیں، ان کے تعلقات اتنے خراب چل رہے ہیں کہ انھوں نے گزشتہ پانچ سال سے جسمانی تعلقات قائم نہیں کئے ہیں۔ دونوں طرف سے صحت سے متعلق کوئی مسئلہ نہیں ہے۔استطاعت کے باوجود شوہر بیوی اور بچوں کی ضروریات کو پوری نہیں کررہا ہے۔ وہ لوگ ایک ہی کمرے میں ایک ساتھ رہتے ہیں لیکن ایک دوسرے سے بات نہیں کرتے ہیں۔ (۱)یہ بات عورت کے علم میں آئی ہے کہ [اتنے طویل عرصہ تک جماع نہ کرنے سے طلاق واقع ہوجاتی ہے]۔ کیا یہ درست ہے؟(۲)کیا وہ اپنے شوہر کے ساتھ اس وقت حلال زندگی بسر کررہی ہے؟ (۳) اگر اس سے طلاق نہیں واقع ہوتی ہے تو کیا اس سے نکاح پر اثر پڑتا ہے، اور کیسے؟

    جواب نمبر: 17569

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(ل):1869=1507-12/1430

     

    اگر شوہر نے جماع نہ کرنے کی قسم نہیں کھائی ہے تو طویل عرصہ تک جماع نہ کرنے سے طلاق واقع نہیں ہوتی۔

    (۲) برتقدیر جواب اول وہ اپنے شوہرکے ساتھ حلال زندگی بسر کررہی ہے۔

    (۳) جب طلاق واقع نہیں ہوئی تو نکاح پر بھی اثر نہیں پڑا، ان دونوں کا نکاح بدستور باقی ہے، البتہ دونوں کا ساتھ رہ کر ایک دوسرے سے بات نہ کرنا سخت گناہ کی بات ہے، ان دونوں کو چاہیے کہ آپس میں معافی تلافی کرکے از سر نو اتحاد واتفاق سے زندگی بسر کرنا شروع کردیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند