• عبادات >> طہارت

    سوال نمبر: 62711

    عنوان: اگر پکے فرش پہ نجاست لگ جائے تو اسے پاک کرنے کا کیا طریقہ ہے ؟ کیا فرش دھونا پڑیگا یا گیلے کپڑے سے پونچھ دینے سے بھی پاک ہوجائگا؟

    سوال: (۱) اگر پکے فرش پہ نجاست لگ جائے تو اسے پاک کرنے کا کیا طریقہ ہے ؟ کیا فرش دھونا پڑیگا یا گیلے کپڑے سے پونچھ دینے سے بھی پاک ہوجائگا؟ (۲) کیا یہ صحیح ہے کہ کسی بھی چیز کو پانی سے اچھی طرح دھونے سے وہ چیز پاک ہوجاتی ہے ؟ (۳) بہشتی زیور میں لکھا ہے کہ اگر چھری چاقو شیشہ، تانبے ، پیتل کی چیزیں اگر ناپاک ہوجائیں تو پاک مٹی سے اچھی طرح مانجھ دینے سے پاک ہو جائینگی اور اگر نقشی چیزیں ہوں تو پاک نہیں ہونگی. کیا نقشی چیزیں پانی سے دھونے سے پاک ہونگی؟ (۴) کیا پانی سے دھونے سے ہر چیز پاک ہوجاتی ہے ؟براہ مہربانی میرے اس سوال کا جواب جلدی دینے کی کوشش کیجئے گا میں طہارت کے مسائل کی وجہ سے بہت پریشان ہوں۔

    جواب نمبر: 62711

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 176-173/Sn=3/1437-U (۱) محض گیلے کپڑے سے پوچھنے سے پکا فرش پاک نہ ہوگا؛ بلکہ دھونا پڑے گا، البتہ اگر دھوپ یا ہوا سے خشک ہوجائے اور فرش پر نجاست کا کوئی اثر باقی نہ رہے تو بغیر دھوئے بھی فرش نماز کے لیے شرعاً پاک ہوجاتا ہے۔ الأرض تطہر بالیبس وذہاب الأثر للصلاة لا للتیمم (ہندیة: ۱/ ۹۹، زکریا) وفیہا ․․․ الآجرة إذا کانت مفروشة فحکمہا حکم الأرض تطہر بالجفاف (حوالہٴ سابق) (۲) جی ہاں! اگر کوئی ناپاک چیز (مثلاً کپڑا وغیرہ) تین مرتبہ دھوکر نچوڑدیا جائے یا اس پر خوب پانی بہادیا جائے کہ نجاست کے زائل ہونے کا غالب گمان ہوجائے تو وہ چیز شرعاً پاک ہوجاتی ہے۔ (شامی: ۱/ ۵۴۲، وبحر: ۱/۴۱۲۔ (۳) جی ہاں! نقشی چیز پانی سے دھونے سے پاک ہوجائے گی۔ (۴) اس کا جواب سوال نمبر (۲) کے جواب کے تحت گزرچکا۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند