• عبادات >> طہارت

    سوال نمبر: 608516

    عنوان:

    استنجاء کے دوران منی کا خروج ہوجائے تو کیا غسل واجب ہوگا؟

    سوال:

    میں بیت الخلا گیا ، اور بیت الخلاء کے دوران منی نکل گئی تو مجھے غسل کرنا ہوگا یا غسل نہیں کرنا ہوگا ؟

    جواب نمبر: 608516

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa:271-201/D-Mulhaqa=6/1443

     صورت مسئولہ میں اگر منی کا خروج شہوت کے ساتھ نہیں ہوا، تو غسل واجب نہیں ہوگا، بیت الخلاء کے وقت منی کے جو قطرات نکلتے ہیں، عموما کسی بیماری کی وجہ سے نکلتے ہیں، اس میں غسل واجب نہیں ہوتا ہے۔

    قال الحصکفی: (وفرض) الغسل (عند) خروج (منی) من العضو (منفصل عن مقرہ)(بشہوة) أی لذة۔۔۔وفی الخانیة: خرج منی بعد البول وذکرہ منتشر لزمہ الغسل. قال فی البحر: ومحلہ إن وجد الشہوة، وہو تقیید قولہم بعدم الغسل بخروجہ بعد البول.( الدر المختار مع رد المحتار: ۱۶۰/۱، ۱۶۱، دار الفکر، بیروت )


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند