• عبادات >> طہارت

    سوال نمبر: 32408

    عنوان: مسلسل فرج سے رطوبت خارج ہوتی ہے

    سوال: مجھ کو نہیں معلوم تھا کہ جب مسلسل فرج سے رطوبت خارج ہوتی ہے تو وضو ٹوٹ جاتا ہے۔ یہ میرے ساتھ ہروقت ہوتا ہے۔ میں نے لوگوں سے پوچھا لیکن انھوں نے بتایا کہ اس سے وضو نہیں ٹوٹتا ہے۔ لیکن اب مجھ کو معلوم ہوا ہے کہ اس سے وضو ٹوٹ جاتا ہے۔ میں نے بغیر اس کو دھوئے ہوئے ماضی میں نماز پڑھی ہوگی۔ کیا مجھ کو تمام نمازیں دہرانی ہوں گی؟ میری عمر تیس سال ہے۔

    جواب نمبر: 32408

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(ل): 944=359-6/1432 فرج سے رطوبت نکلنے سے وضو ٹوٹ جاتا ہے، البتہ اگر کسی کی فرج سے مسلسل رطوبت نکلتی ہو اور اس کو نماز کے پورے وقت میں اتنا وقت نہیں مل پاتا کہ وہ وضو کرکے فرض ادا کرسکے تو وہ شرعاً معذور ہے اور معذور کا وضو اس چیز سے جس کے سبب وہ معذوار ہوا ہے وضو نہیں ٹوٹتا، اگر آپ پر مذکورہ بالا معذوری کی تعریف صادق آتی ہے تو آپ پر ماضی میں پڑھی گئی نمازوں کے اعادہ کی ضرورت نہیں، اور اگر آپ پر معذور کی تعریف صادق نہیں آتی تو آپ کو ماضی میں بلا وضو پڑھی گئی تمام نمازوں کا اعادہ کرنا ہوگا۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند