• عبادات >> صوم (روزہ )

    سوال نمبر: 60545

    عنوان: رمضان ماہ میں سحری کا وقت کب تک ہے، کیا اذان فجر کی ختم تک سحری کرسکتے ہیں یا نہیں؟

    سوال: رمضان ماہ میں سحری کا وقت کب تک ہے، کیا اذان فجر کی ختم تک سحری کرسکتے ہیں یا نہیں؟

    جواب نمبر: 60545

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 849-837/N=10/1436-U سحری کا وقت طلوع صبح صادق سے پہلے پہلے تک رہتا ہے اور صحیح ومعتبر جنتری میں ختم سحر کا جو وقت لکھا ہو، احتیاطاً اس سے پانچ دس منٹ پہلے ہی سحری سے فارغ ہوجانا چاہیے؛ کیوں کہ جنتریوں میں جو اوقات لکھے ہوتے ہیں وہ محض ظنی وتخمینی ہوتے ہیں، قطعی ویقینی نہیں۔ اور اذان فجر طلوع صبح صادق کے بعد کہی جاتی ہے اور بہت سی جگہ احتیاطاً پانچ دس منٹ کے بعد کہی جاتی ہے؛ اس لیے طلوع صبح صادق کے بعد اذان فجر تک سحری کرنا ہرگز درست نہیں اور ایسے لوگوں کا روزہ نہیں ہوتا، اور اگر اذان فجر صبح صادق سے پہلے کہی گئی ہو تو مفتی بہ قول میں وہ اذان معتبر نہ ہوگی، طلوع صبح صادق کے بعد اذان دوبارہ کہی جائے گی۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند