• عبادات >> صوم (روزہ )

    سوال نمبر: 28867

    عنوان: حضرات کرام میرا سوال نفل روزہ کے متعلق ہے میں یہ جاننا چاہتا ہوں کہ کیا نفل روزہ بغیر سحری کے رکھ سکتے ہیں؟ اگر میں پیر ،جمعرات کا روزہ رکھتا ہوں تو مہینے کے تقریباً آٹھ روزے ہوتے ہیں جس میں سے میرے سات روزے بغیر سحری کے ہوتے ہیں، کیا یہ صحیح ہے؟ مجھ سے فجر کی نماز کی پابندی نہیں ہو پارہی ہے، باقی نمازوں کا پابند ہوں الحمد للہ۔ 

    سوال: حضرات کرام میرا سوال نفل روزہ کے متعلق ہے میں یہ جاننا چاہتا ہوں کہ کیا نفل روزہ بغیر سحری کے رکھ سکتے ہیں؟ اگر میں پیر ،جمعرات کا روزہ رکھتا ہوں تو مہینے کے تقریباً آٹھ روزے ہوتے ہیں جس میں سے میرے سات روزے بغیر سحری کے ہوتے ہیں، کیا یہ صحیح ہے؟ مجھ سے فجر کی نماز کی پابندی نہیں ہو پارہی ہے، باقی نمازوں کا پابند ہوں الحمد للہ۔ 

    جواب نمبر: 28867

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(ل): 101=83-2/1432

    روزے کے لیے سحری کرنا مسنون ہے فرض یا واجب نہیں ہے اس لیے آپ کوشش بھی کریں کہ سحری کرکے ہی روزہ رکھیں، البتہ اگر آپ نے سحری نہیں کی اور روزہ رکھ لیا تو بھی آپ کا رزہ صحیح اور درست ہوجائے گا، فجر کی نماز کی پابندی نہ کرنا غلط بات ہے بقیہ نمازوں کی طرح فجر کی نماز کی پابندی بھی ضروری ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند