• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 9320

    عنوان:

    حی علی الصلوة کا جواب لا حول ولا قوة الا باللہ العلی العظیم ہے لیکن کسی نے مجھ سے کہا کہ مسجد میں یہ جواب یعنی لا حول ولا قوة نہیں ہے بلکہ وہی الفاظ کہنے ہیں، یعنی حی علی الصلوة۔ براہ کرم مجھے صحیح حکم بتائیں۔

    سوال:

    حی علی الصلوة کا جواب لا حول ولا قوة الا باللہ العلی العظیم ہے لیکن کسی نے مجھ سے کہا کہ مسجد میں یہ جواب یعنی لا حول ولا قوة نہیں ہے بلکہ وہی الفاظ کہنے ہیں، یعنی حی علی الصلوة۔ براہ کرم مجھے صحیح حکم بتائیں۔

    جواب نمبر: 9320

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 2493=2105/ ب

     

    مسجد اورغیرمسجد دونوں جگہ حی علی الصلاة کا جواب لاحول ولا قوة الا باللہ سے ہی دینا ہے، مسلم شریف میں حضرت عمر رضی اللہ عنہ سے یہی طریقہ مروی ہے: عن عمر قال قال رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم إذا قال الموٴذن اللہ أکبر اللہ أکبر فقال أحدکم اللہ أکبر اللہ أکبر․․․․ ثم قال: حي علی الصلاة قال لا حول ولا قوة إلا باللہ ثم قال حی علی الفلاح قال لا حول ولا قوة إلا باللہ دخل الجنة رواہ مسلم (مشکاة المصابیح ، ص:۶۵ة باب فضل الأذان وإجابة الموٴذن)۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند