• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 606627

    عنوان:

    نماز میں نیند آجانا اور آنکھ کھلنے پر بقیہ نماز پوری کرنا؟

    سوال:

    میرا سوال ہے کہ میری والدہ ماجدہ عشاء کی نماز پڑھتے پڑھتے مصلے پر سو جاتی ہیں ۔ اور پھر آنکھ کھلنے پر بقیہ نماز ادا کرتی ہیں ۔ اس پر کیا حکم ہے ؟

    جواب نمبر: 606627

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa:233-193/N=4/1443

     اگر آپ کی والدہ ضعف وپیرانہ سالی یا نیند کے غلبہ کی وجہ سے عشا میں نماز پڑھتے پڑھتے دو رکعت یا چار رکعت پر سلام پھیر کر مصلے (جائے نماز) پر سوجاتی ہیں اور آنکھ کھلنے پر باقاعدہ وضو کرکے مابقیہ نماز ادا کرتی ہیں تو وہ معذور ہیں، اس طرح اُن کے لیے نماز پڑھنے میں کچھ حرج نہیں، اور اگر وہ نماز میں سجدے میں جاکر سوجاتی ہیں اور پھر آنکھ کھلنے پر بلا وضو وہ نماز دوبارہ ادا کرتی ہیں یا درمیان نماز اٹھ کر اُسی نماز کا مابقیہ حصہ مکمل کرلیتی ہیں تو ان کا یہ طریقہ درست نہیں، اُنھیں صحیح مسئلہ بتادیا جائے ۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند