• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 605041

    عنوان:

    سگریٹ یا حقہ پینے والے كو امام بنانا كیسا ہے؟

    سوال:

    سوال : جو شخص سگریٹ نوشی/حقہ یا شیشہ پیتا ہو اس شخص کو امام بنانا صحیح ہوگا؟ ایسے شخص کے پیچھے نماز پڑھنا درست ہے ؟

    جواب نمبر: 605041

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa : 880-720/M=11/1442

     تمباکو اگر مضر صحت اور نشہ آور نہ ہوتو اگرچہ استعمال کی گنجائش ہے تاہم بچنا بہتر ہے، سگریٹ نوشی وغیرہ بھی بلاضرورت (شوقیہ) مکروہ تنزیہی ہے، ان چیزوں کی عادت لگنے سے منھ سے بدبو آنے لگتی ہے اور پھر اس سے نمازیوں کو اور فرشتوں کو اذیت ہوتی ہے اس لیے ان چیزوں سے بچنا چاہئے بالخصوص امام کو احتراز کرنا چاہئے، نماز اگرچہ ایسے امام کے پیچھے ہوجاتی ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند