• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 57286

    عنوان: چھوٹی ڈاڑھی ركھنے والے كے پیچھے نماز

    سوال: میں یو اے ای (ابوظہبی)میں کام کرتا ہوں، میرے کمرے کے پاس جو مسجد ہے اس کا امام مصر کا رہنے والا ہے اور اس کی داڑھی چھوٹی سی ہے۔ سنت کے مطابق نہیں ہے، یہ پتا بھی نہیں چلتا کہ وہ داڑھی منڈواتا ہے یا شروع سے ہی اتنی ہے، کیا اس کے پیچھے نماز ہوتی ہے؟ اور اگر پتہ چلا کہ وہ منڈواتا ہے تو کیا صورت ہوگی؟ او رجمعہ کی نماز پڑھانے والا امام داڑھی منڈواتا ہے لیکن کلین شیو نہیں ہے، چھوٹی چھوٹی رکھتا ہے۔براہ کرم رہنمائی کریں میں حنفی مسلک سے ہوں۔

    جواب نمبر: 57286

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 304-300/L=3/1436-U امام کے لیے دیگر اوصاف امامت سے متصف ہونے کے ساتھ ساتھ کم ازکم یکمشت داڑھی رکھنا واجب ہے، جو امام داڑھی منڈاتا ہو یا خشخشی داڑھی رکھتا ہو اس کی اقتداء میں نماز مکروہ ہوتی ہے؛ البتہ اگر کسی کی داڑھی کٹائے بغیر ہی چھوٹی ہو تواس کی اقتداء میں نماز بلاکراہت درست ہوجائے گی۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند