• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 52274

    عنوان: نماز میں گھٹنے میں پڑیشانی كی وجہ سے موڑنا دشوار ہے؟

    سوال: میرے پیر (گھٹنہ ) میں پریشانی ہونے کی وجہ سے ڈاکٹر نے پیر کو موڑنے سے منع کیا ہے، پر موڑ سکتاہوں ، لیکن ڈاکٹرنے کہا ہے کہ موڑنے سے مسئلہ زیادہ ہوگا تو کیا میں بیٹھ کے نماز پڑھ سکتاہوں؟ سجدے میں پیر موڑنا پڑتاہے تو سجدہ کیسے کروں؟

    جواب نمبر: 52274

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 695-706/N=6/1435-U نماز ۲۴/ گھنٹے میں صرف پانچ مرتبہ پڑھی جاتی ہے، لہٰذا آپ کم ازکم فرض نمازیں لازمی طور پر کھڑے ہوکر ہی پڑھیں اور رکوع وسجدہ میں احتیاط کے ساتھ گھٹنوں کو موڑیں۔ اور دیگر اوقات میں گھٹنے موڑنے سے پرہیز کریں، اور اگر فرض نمازوں میں گھٹنے موڑنے میں بھی پیشانی بڑھ جانے کا ظن غالب ہو اور یہ بات تجربہ سے ثابت ہو یا کسی مسلمان ماہر ڈاکٹر کی یہی رائے ہو تو دوبارہ سوال کیا جائے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند