• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 49991

    عنوان: کیا بدعتیوں کے پیچھے نماز ہوجاتی ہے اور کیا تبلیغی جماعت والے جو اس نیت سے ان کے پیچھے نماز پڑھ لیتے ہیں کہ پھر ان کو آہستہ آہستہ تبلیغ کے ذریعہ سمجھانا بھی ہے تو کیا ان کی نماز ہوجاتی ہے؟

    سوال: کیا بدعتیوں کے پیچھے نماز ہوجاتی ہے اور کیا تبلیغی جماعت والے جو اس نیت سے ان کے پیچھے نماز پڑھ لیتے ہیں کہ پھر ان کو آہستہ آہستہ تبلیغ کے ذریعہ سمجھانا بھی ہے تو کیا ان کی نماز ہوجاتی ہے؟

    جواب نمبر: 49991

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 250-245/N=2/1435-U جس بدعتی کی بدعت کفر تک پہنچی ہوئی نہ ہو اس کے پیچھے نماز کراہت تحریمی کے ساتھ ہوجاتی ہے، اس لیے اگر قریب میں کوئی سنی صالح امام میسر ہو تو اس کے پیچھے نماز پڑھی جائے، بدعتی کے پیچھے نہ پڑھی جائے، اور اگر قریب میں کوئی اہل السنة والجماعت کی مسجد نہ ہو تو اکیلے نماز پڑھنے سے بہتر ہے کہ اوپر ذکر کردہ بدعتی کے پیچھے جماعت کے ساتھ نماز پڑھ لی جائے اوردوسروں کو دین سے قریب کرنے کے لیے قریب صالح امام ہوتے ہوئے بدعتی کے پیچھے نماز پڑھ کر کراہت تحریمی کا ارتکاب کرنا درست نہیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند