• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 170050

    عنوان: سجدہ كرنے میں تكلیف ہو تو كیا شروع سے بیٹھ كر نماز پڑھی جاسكتی ہے؟

    سوال: میرا سوال ہے اگر کسی کے پیر میں لوہا کا راڈ ہو تو سجدہ میں جانے کو تکلیف ہوتی ہے تو کیا وہ شخص شروع سے بیٹھ کر نماز ھ سکتا ہے نماز قبول ہوگی یا نہیں؟یا پہلے کھڑا ہوجائے پھر بیٹھ کر نماز ادا کرے ۔

    جواب نمبر: 170050

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa:708-645/sd=8/1440

    صورت مسئولہ میں اگر کوئی شخص سجدہ پر قادر نہیں ہے اور اس کو زمین پر کسی بھی طرح بیٹھ کر اشارے سے نماز پڑھنے میں تکلیف نہ ہو، تو کرسی کے بجائے زمین ہی پر بیٹھ کر اشارے سے نماز اداء کرنی چاہیے اوراگر زمین پر کسی بھی ہیئت میں بیٹھنا متعذر ہو تو وہ کرسی پر اشارے سے نماز ادا کر سکتا ہے اور سجدہ پر قادر نہ ہونے کی وجہ سے چونکہ قیام ساقط ہوجاتا ہے، اس لیے شروع ہی سے بیٹھ کر نماز اداء کرنی چاہیے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند