• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 149736

    عنوان: کیا فجر کی اذان کے بعد سنت سے پہلے نفل نماز (تحیہ مسجد) پڑھنا جائز ہے ؟

    سوال: کیا فجر کی اذان کے بعد سنت سے پہلے نفل نماز (تحیہ مسجد) پڑھنا جائز ہے ؟

    جواب نمبر: 14973601-Sep-2020 : تاریخ اشاعت

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa: 605-617/N=7/1438

    جی! نہیں، صبح صادق کے بعدفجر کی سنتوں کے علاوہ تحیة المسجد وغیرہ کوئی نفل نماز نہیں پرھ سکتے۔ وکذا الحکم من من کراھة نفل وواجب لغیرہ لا فرض وواجب لعینہ بعد طلوع فجر سوی سنتہ لشغل الوقت بہ تقدیراً الخ (الدر المختار مع رد المحتار، أول کتاب الصلاة، ۲: ۳۷، ط؛ مکتبة زکریا دیوبند)، والکراھة ھنا تحریمیة أیضاً کما صرح بہ فی الحلبة، ولذا عبر فی الخانیة والخلاصة بعدم الجواز، والمراد عدم الحل لا عدم الصحة کما لا یخفی (رد المحتار، ۲: ۳۶)۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند