• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 11582

    عنوان:

    کیا یہ صحیح ہے کہ سنت کی چار رکعت میں سورہ فاتحہ کے بعد کوئی سورت لازمی پڑھی جائے گی؟ اور فرض کی چار رکعت والی نماز میں صرف شروع کی دورکعت میں سورت ملائی جائے گی؟ میں فرض و سنت نماز میں اکثر ایک ہی رکعت میں مکمل سورت پڑھ لیتی ہوں جیسے سورہ یسین، ملک، نبا، قیامہ وغیرہ ، پھر اگلی رکعت میں دوسری سورت مکمل پڑھتی ہوں۔ کیا یہ طریقہ درست ہے؟

    سوال:

    کیا یہ صحیح ہے کہ سنت کی چار رکعت میں سورہ فاتحہ کے بعد کوئی سورت لازمی پڑھی جائے گی؟ اور فرض کی چار رکعت والی نماز میں صرف شروع کی دورکعت میں سورت ملائی جائے گی؟ میں فرض و سنت نماز میں اکثر ایک ہی رکعت میں مکمل سورت پڑھ لیتی ہوں جیسے سورہ یسین، ملک، نبا، قیامہ وغیرہ ، پھر اگلی رکعت میں دوسری سورت مکمل پڑھتی ہوں۔ کیا یہ طریقہ درست ہے؟

    جواب نمبر: 11582

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 480=349/ل

     

    (۱) جی ہاں! سنت کی چاروں رکعت میں سورہٴ فاتحہ کے بعد سورت ملانا ضروری ہے، اور فرض کی صرف دو رکعتوں میں سورت ملائی جائے گی۔

    (۲) یہ طریقہ درست ہی نہیں بلکہ یہی طریقہ اولیٰ وافضل ہے کہ فرض وسنت کی ہررکعت میں مکمل سورت پڑھی جائے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند