• عبادات >> ذبیحہ وقربانی

    سوال نمبر: 66013

    عنوان: بدھیہ / خصی بکرے کی قربانی

    سوال: میرا سوال یہ ہے کہ ہم لوگ عید الاضحی کے موقع پر جو قربانی کرتے ہیں بکرے کی، شریعت میں ہے کہ جانور میں کوئی (نقص/کمی) نہیں ہونی چاہئے ، لیکن جو بازار میں بکرے ملتے ہیں وہ تو بدہیہ ملتے ہیں جو کہ نقص/کمی ہوجاتی ہے اور اکثر ایسا ہے کہ لوگ خرید تے ہیں اور پسند کرتے ہیں، شریعت کے حساب سے کیا صحیح ہے؟ براہ کرم، اس پر روشنی ڈالیں۔

    جواب نمبر: 66013

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 989-1017/L=9/1437 جانور کا خصی ہونا عیب نہیں؛ اس لیے خصی جانور کی قربانی بلاشبہ جائز اور درست ہے، آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم سے خصی جانور کی قربانی کرنا ثابت ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند