• متفرقات >> دیگر

    سوال نمبر: 51593

    عنوان: جن لوگـوں كی آمدنی مشكوك ہو ان كے یہاں كھانا پینا

    سوال: گذارش ہے کہ اکثر علماء عید الاضحی کے موقع پر فرماتے ہیں کہ بینک اور انشورنس ملازمین کے ساتھ مشترکہ قربانی کرنا جائز نہیں، اس قسم کے مسائل دیکھتے ہوئے رہنمائی فرمائیں کہ بینکنگ ، انشورنس میں کام کرنے والے ملازمین ، وکلاء (جن کی اکثیرت ناجائز اور ں حرام کا مال کماتے ہیں یا جھوٹ کا سہارا لیتے ہوئے مال کماتی ہے) پولس مین، (جن میں سے اکثر ناجائز اور حرام کا مال کماتے ہیں) انکم ٹیکس اور ایکسائز ملازمین (جو ناجائز مال کماتے اور کھاتے ہیں) میں سے کن کن کے ساتھ اپنی بیٹی یا بہن کی شادی کرانا جائز ہے اور کن کے ساتھ ناجائز ؟اسلامی تعلیمات کی روشنی میں وضاحت فرمائیں۔

    جواب نمبر: 51593

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 558-558/M=5/1435-U جن لوگوں کی کمائی کا کل یا اکثر حصہ ناجائز پر مشتمل ہو ان کے یہاں کھانے پینے اور انکا ہدیہ قبول کرنے سے منع کیا گیا ہے، بنابریں ایسے گھرانے میں شادی بیاہ سے احتیاط کرنا بہتر ہے، تاکہ آدمی ناجائز لقمہ کے استعمال سے محفوظ رہے اور دین دار گھرانے میں شادی بیاہ کرنے کو ترجیح دینی چاہیے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند