• متفرقات >> دیگر

    سوال نمبر: 25021

    عنوان: فتوی محمودیہ 5/298/ میں مفتی محمود صاحب نے تذکرہ کیا ہے کہ اگر کوئی عورت اس دنیا میں کسی مرد سے شادی کرنے پر خوش نہ ہو تو جنت میں اللہ تعالی اس عورت کے لیے ایک خاص مرد پیدا کرے گا، بالکل اسی کی طرح۔ کیا یہ کسی صحیح حدیث یا کسی صحابی کے قول سے ثابت ہے؟ 

    سوال: فتوی محمودیہ 5/298/ میں مفتی محمود صاحب نے تذکرہ کیا ہے کہ اگر کوئی عورت اس دنیا میں کسی مرد سے شادی کرنے پر خوش نہ ہو تو جنت میں اللہ تعالی اس عورت کے لیے ایک خاص مرد پیدا کرے گا، بالکل اسی کی طرح۔ کیا یہ کسی صحیح حدیث یا کسی صحابی کے قول سے ثابت ہے؟ 

    جواب نمبر: 25021

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(م): 1718=1718-1/1432

    یہ بات ”الغرائب“ نامی کتاب کے حوالے سے فتاویٰ محمودیہ میں لکھی ہوئی ہے، عبارت اس طرح ہے: ”في الغرائب ولو ماتت قبل أن تتزوج تخیر أیضًا إن رضیت بآدمي زوجت منہ وإن لم ترض فاللہ یخلق من الحور العین فیزوجہا منہ إلخ“ غرائب کا حوالہ مولانا عبدالحی صاحب لکھنوی بھی اپنے فتاویٰ میں دیتے ہیں، اس بات کی تحقیق نہیں ہوسکتی کہ یہ صحیح حدیث ہے یا صحابی کے قول سے ثابت ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند