• متفرقات >> دیگر

    سوال نمبر: 172760

    عنوان: كیا اولاد كو مكان دینا والدین كی ذمہ داری ہے؟

    سوال: میرے دوبھائی جو سرکاری ملازم اور میں پر ا یوٹ کام کرتا جہاں کام ملا وہاں لیکن ابھی میں خالی ہوں میرے ماں باپ مجھ سے زیادہ لگاؤ نہیں رکھتے اور مجھے رہنے کیلئے کوئی ٹھکانہ نہیں دیتے اور ایسی جگہ ٹھکانہ بتاتے جہاں کافی پریشانی کا سامنہ کرنا پڑتا مثلا پانی، کا مسئلہ لائٹ کا مسئلہ اور بہت سے مسائل کا سامنہ کرنا پڑتا، میرے بڑے بھائی نے والد صاحب کی کچھ جائیداد بیچے کر اپنی ملکیت خریدی ہے جس میں والد والدہ اور دیگر چھوٹے بھائی رہتے ہیں لیکن وہ خود اپنی فیملی کے ساتھ باہر رہتا ہے . میرے رہنے کا کوئی انتظام نہیں کرتے حالانکہ اس میں والد صاحب کی جائیدار کا حصہ لگا ہوا ہے اسکے علاوہ نہ کوئی کاروبار سے لگا کر دیتے اور نہ کوئی جائیداد بیچ کر قریب ہی محلے میں رہنے کیلئے گھر د یتے والد صاحب کو جائیدار بہت ہے مسلمان وہ ہے جو اپنے لیے پسند کرے اپنے بھائی کیلئے وہی پسند کرے مجھے اتنا معلوم رمضان میں تھوڑے بہت پیسے دیتے ہیں بھائی لوگ لیکن ایک ٹھکانہ اور روزی روٹی یعنی کچھ نہ کچھ کاروبار سے لگانا چاہیے ۔

    جواب نمبر: 172760

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa : 1377-1138/H=12/1440

    آپ خالی نہ رہیں اپنے مناسب جو بھی کام چھوٹا بڑا محنت مزدوری کا ملے اس کو کرتے رہیں نیز والدین کی جانی مالی خدمت کا بھی اہتمام کریں ان کو خوش رکھنے کی فکر میں ہمہ اوقات لگے رہیں ان کے حق میں دعاوٴں کا بھی خاص اہتمام کرتے رہیں ان کے جائیداد و اموال سے اپنے آپ کو مستغنی رکھیں ہرگناہ سے اپنے آپ کو بچائیں اور اعمال صالحہ میں مشغول رہیں تقویٰ طہارت کو لازم پکڑلیں ان شاء اللہ حلال روزی برکت والی اللہ پاک آپ کو عطاء فرمائے گا۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند