• معاشرت >> نکاح

    سوال نمبر: 50316

    عنوان: مجھے یہ معلوم کرنا ہے کہ کیا اسلام میں ایک مسلم مرد کسی عیسائی لڑکی کے ساتھ نکاح کرسکتاہے ؟

    سوال: مجھے یہ معلوم کرنا ہے کہ کیا اسلام میں ایک مسلم مرد کسی عیسائی لڑکی کے ساتھ نکاح کرسکتاہے ؟

    جواب نمبر: 50316

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 318-308/B=3/1435-U عیسائی لڑکی سے مسلمان لڑکے کا نکاح منعقد ہوجاتا ہے، شرط یہ ہے کہ لڑکی واقعةً عیسائی مذہب پر ہو، آج کل کے عیسائیوں کی طرح نہ ہو جو نام کے عیسائی ہوتے ہیں اوران کے عقائد دہریوں کے عقائد ہوتے ہیں کہ خدا، رسول کسی کو نہیں مانتے نیز دوسری شرط یہ ہے کہ نکاح شرعی طریقے پر دو گواہوں کے سامنے ہو، لیکن حتی الامکان واقعةً عیسائی لڑکی سے بھی نکاح کرنے سے بچنا چاہیے، قال في البدائع: ویجوز أن ینکح الکتابیة لقولہ عز وجل: ”وَالْمُحْصَنَاتُ مِنَ الَّذِیْنَ اُوْتُوْا الْکِتَابَ مِنْ قَبْلِکُمْ“ (سورہٴ مائدہ: ۵۰) (۲/۵۵۲ ط زکریا) وقال في رد المحتار: ففي الفتح ویجوز تزوج الکتابیات والأولی أن لا یفعل (شامي: ۴/ ۱۳۴، ط زکریا)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند