• معاشرت >> نکاح

    سوال نمبر: 36601

    عنوان: کیا میری لئے گناہ ہے

    سوال: میری شادی چار سال پہلے ہوئی تھی، میرے شوہر کا رویہ میرے ساتھ بالکل ٹھیک نہیں تھا مگر اب ان کا رویہ ٹھیک ہوا ہے لیکن میں ان سے پیار نہیں کرتی،جب وہ مباشرت کرنا چاہتا ہے تو میرا دل نہیں چاہتا اور میں انکار کرتی ہوں، سوال یہ ہے کے انکار کرنے سے مجھے گناہ ملتاہے ۔ اور کیا میں مجبورً ا اظہار محبت کروں ؟

    جواب نمبر: 36601

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(ل): 267=169-2/1433 مباشرت کے وقت انکار کرنے سے آپ گنہ گار ہوں گی۔ شوہر کی اطاعت ہرامر مباح میں واجب ہے، ومنہا وجوب طاعة الزوج علی الزوجة إذا دعاہا إلی الفراش لقولہ تعالی: وَلَہُنَّ مِثْلُ الَّذِیْ عَلَیْہِنَّ بِالمَعْرُوْفِ (بدائع الصنائع: ۲/۶۵۰) اگر آپ کا دل نہ چاہے تو بھی آپ اظہار محبت کرتی رہیں، بالخصوص جب کہ آپ کے شوہر کا رویہ بھی آپ کے تئیں ٹھیک ہوچکا ہے، جبراً محبت کا اظہار کرنے سے آپ کو عند اللہ اجر ملے گا۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند