• عبادات >> جمعہ و عیدین

    سوال نمبر: 600269

    عنوان: اگر كوئی دیہاتی شہر آجائے تو كیا اس پر جمعہ ضروری ہے؟

    سوال:

    مفتی صاحب ایک دیہاتی شخص جو شہر سے ایک کلومیٹر کے فاصلے پر رہتا ہے جس پر جمعہ فرض نہیں وہ کسی ضرورت کے تحت شہر میں آتا ہے جمعہ کے دن تو کیا اس پر جمعہ کی نماز پڑھنا ضروری ہے یا اذان اول کے بعد ضروری ہوجاتاہے یا اس پر جمعہ کی نماز فرض نہیں ؟اس با رے میں رہنمائی فرمائیں۔

    جواب نمبر: 600269

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa : 126-200/H=03/1442

     اگر جمعہ کے وقت تک ٹھہرنے کا ارادہ ہو تب تو اس پر جمعہ واجب ہو جائے گا ورنہ نہیں؛ البتہ جب کہ شہر سے ایک ہی کلو میٹر کا فاصلہ ہے تو بہتر یہ ہے کہ جس جگہ وہ دیہات ہے اُس کا معائنہ مقامی کسی مستند و ثقہ مفتی صاحب سے کرالیں، اگر وہ جگہ فناء شہر میں ہے تو خود اُس جگہ میں بھی جمعہ فرض ہو سکتا ہے، بعد مشاہدہ جو حکم مفتی صاحب بتلادیں اس کے مطابق آئندہ عمل کریں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند