• عبادات >> جمعہ و عیدین

    سوال نمبر: 600073

    عنوان:

    صحرا میں كیمپ میں رہنے والوں كے لیے جمعہ كی نماز پڑھنے كے بارے میں كیا حكم ہے؟

    سوال:

    میں سعودی عرب میں ایک کمپنی میں کام کرتا ہوں کمپنی والوں نے ہمارا کیمپ ایسی جگہ میں بنایا ہے جو کہ صحرا کے بیچ میں ہے کیمپ سے بڑا بازار تقریباً 10 کلومیٹر کے فاصلے پر ہے اور کیمپ کے چاروں طرف باؤنڈری کے لیے جال لگایا ہوا ہے اور جال سے باہر جہاں تک نظر جاتی ہے ریت ہی ریت نظر آتی ہے ہمیں کیمپ سے باہر جانے کی اجازت مہینے میں ایک بار ملتی ہے جب تنخواہ آتی ہے اس وقت کیمپ میں تقریباً 80 لوگ ہوتے ہیں کیمپ میں ایک مسجد ہے جہاں پہلے سب نمازیں با جماعت ادا ہوتی تھیں لیکن اب کرونا کی وجہ سے مسجد کو بند کیا گیا ہے جس کی وجہ سے پچھلے ایک مہینے سے ہم لوگ نمازیں اپنے کمروں میں پڑھتے ہیں اس لئیے ہم سب کو پریشانی ہو رہی ہے کہ چار جمعے گزر گئے لیکن ہم نے جمعہ کی نماز نہیں پڑھی لہذا ہم کیا کریں۔

    جواب نمبر: 600073

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa : 78-48/H=02/1442

     آپ کا کیمپ صحراء میں ہے اور دس کلومیٹر کے فاصلہ پر بڑا بازار ہے، ظاہر ہے کہ آپ کا کیمپ نہ شہرمیں ہے نہ ہی شہر کی فناء میں ہے تو ایسی صورت میں آپ لوگوں پر جمعہ واجب ہی نہیں ہے۔ آپ حضرات جمعہ کے دن مثل دیگر ایام کے ظہر باجماعت اداء کر لیا کریں، مسجد فی الحال بند ہے تو حسب موقعہ کیمپ میں باجماعت پڑھتے رہیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند