• متفرقات >> اسلامی نام

    سوال نمبر: 606403

    عنوان:

    نام میں عارف کے ساتھ ”ساہر“ لگانا کیسا ہے؟

    سوال:

    میں نے بیٹے کا نام صاحر (بیدار،جاگنا) کے ساتھ عارف بھی لگایا ہے یعنی صاحر عارف رکھا ہے ۔تو کیا یہ نام اسلامی اصولوں کے مطابق ہے یا نہیں؟

    جواب نمبر: 606403

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa:189-150/L=3/1443

    ”ساہر“ جس کے معنی بیدار کے ہیں وہ ”س“ اور ”ہ“ کے ساتھ ساہر ہے ، عارف کے ساتھ ”ساہر“ لگانے میں اسلامی اصولوں کے اعتبار سے تو فی نفسہ کوئی حرج نہیں؛ مگر چونکہ اس میں ساحر(جادوگر )کے ساتھ اشتباہ کاقوی امکان ہے؛اس لیے ” ساہر“ نہ لگاکر عارف سے قبل محمد لگا لیں تو زیادہ بہتر ہوگا تاکہ کوئی اشتباہ نہ ہو ۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند