• عقائد و ایمانیات >> اسلامی عقائد

    سوال نمبر: 605436

    عنوان:

    كیا آپ صلی اللہ علیہ وسلم اولیاء كے مشورے میں روحانی یا جسمانی طور پر شریك ہوتے ہیں؟

    سوال:

    ایک صاحب نے اپنے بیان میں کہا کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم موجودہ دور میں اولیاء اللہ کے مشورے میں کبھی کبھی روحانی طورپر اور کبھی جسمانی طورپر یعنی اپنے جسم اطہر کے ساتھ شریک ہوتے ہیں، کیا یہ بات درست ہے کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم ابھی بھی اپنے جسم مبارک کے ساتھ اس فانی دنیا میں آتے ہیں؟ براہ کرم، اس بات کو سمجھائیں۔

    جواب نمبر: 605436

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa : 950-664/SN=12/1442

     روحانی طور پر شرکت میں تو استبعاد نہیں ہے، علمائے کرام نے اس کی صراحت کی ہے کہ ارواح طیبہ کو باذن اللہ قدرت ہوتی ہے کہ عالم میں کسی جگہ آکر تصرف کریں۔ (دیکھیں: جواہر الفقہ: 1/231، رسالہ: الافصاح عن تصرفات الجن والأرحام، مطبوعہ: مکتبہ زکریا، دیوبند) رہا جسمانی طور پر آپ علیہ الصلاة والسلام کا شریک ہونا تو ہمیں اس کی تصریح نہیں ملی۔ جن صاحب نے یہ بیان کیا ہے، ان سے دریافت کرلیں کہ جسمانی طور پر شرکت کی نوعیت کیا ہوتی ہے؟ اور اس سلسلے میں ان کے پاس دلائل کیا ہیں؟


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند