• عقائد و ایمانیات >> اسلامی عقائد

    سوال نمبر: 58535

    عنوان: میں” مکروہ“ کے سلسلے میں وضاحت جاننا چاہتاہوں،کیوں کہ ایک مرتبہ میں نے سنا ہے کہ اسلام میں صرف دو ہی باتیں ، قبول یا عدم قبول ، یا صحیح یا درست ؟یا ہم کہتے ہیں زیرو یا ایک ؟یہاں درمیان میں کوئی چیز نہیں ہے۔ تو میں یہ جاننا چاہتاہوں کہ” مکروہ“ کیا ہے؟

    سوال: میں” مکروہ“ کے سلسلے میں وضاحت جاننا چاہتاہوں،کیوں کہ ایک مرتبہ میں نے سنا ہے کہ اسلام میں صرف دو ہی باتیں ، قبول یا عدم قبول ، یا صحیح یا درست ؟یا ہم کہتے ہیں زیرو یا ایک ؟یہاں درمیان میں کوئی چیز نہیں ہے۔ تو میں یہ جاننا چاہتاہوں کہ” مکروہ“ کیا ہے؟

    جواب نمبر: 58535

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 521-517/H=6/1436-U اسلام میں صرف دو ہی باتیں قبول یا عدم قبول الخ یہ آپ نے کہاں سنا ہے؟ اس کا حوال لکھتے دلیلِ شرعی سے جس چیز کا ترک راجح ہو وہ مکروہ ہے،پھر مکروہ کے بھی درجات ہیں، قواعد الفقہ میں ہے: المکروہ ما ہو راجح الترک فإن کان إلی الحرام أقرب تکون کراہة تحریمیة وإن کان إلی الحل أقرب تکون تنزیہیة ومعنی القرب إلی الحرمة إنہ یستحق فاعلہ العتاب ومعنی القرب إلی الحل إنہ لا یستحق فاعلہ العتاب بل یستحق تارکہ أدنی ا لثواب ص:۵۰۳)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند