• عقائد و ایمانیات >> اسلامی عقائد

    سوال نمبر: 30677

    عنوان: کیا کسی نبی سے ارتکاب گناہ ہوسکتاہے؟

    سوال: کیا کسی نبی سے ارتکاب گناہ ہوسکتاہے؟اگر نہیں تو آپ اس آیت کی تشریح کیسے کریں گے کہ ” ہم نے آپ کے پچھلے اور اگلے گناہ معاف کردیا“ براہ کرم، اس کی وضاحت فرمائیں۔

    جواب نمبر: 30677

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(م): 732=732-5/1432 نبی سے گناہ کا ارتکاب نہیں ہوتا، اور آیت کی تشریح وتاویل میں مفسرین حضرات نے لکھا ہے کہ اس سے مراد خلافِ اولیٰ عمل یا معمولی لغزش کا صدور ہے یا موٴمنین کے گناہ مراد ہیں وغیرہ وغیرہ : لم یکن للنبي صلی اللہ علیہ وسلم ذنب فماذا یغفر لہ ؟ قلنا: الجواب عنہ قد تقدم مرارًا من وجوہ ؛ أحدہا: المراد ذنب الموٴمنین، ثانیہا ترک الأفضل، ثالثہا: الصغائر․․ رابعہا العصمة (التفسیر الکبیر: ۲۸/۶۸، بیروت)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند