• عقائد و ایمانیات >> اسلامی عقائد

    سوال نمبر: 11866

    عنوان:

    جناب سب سے پہلے میں آپ کو اتنی اچھی ویب سائٹ چلانے کے لیے مبارک باد پیش کرتاہوں۔ میرا سوال یہ ہے کہ ہم لوگ کہتے ہیں کہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم اس دنیا سے چلے گئے ہیں یعنی مر گئے ہیں؟ تو لاالہ الا اللہ محمد رسول اللہ کا معنی اللہ کے سوا کوئی معبود نہیں اور محمد صلی اللہ علیہ وسلم اس کے رسول ہیں۔ اگر حضور صلی اللہ علیہ وسلم مر گئے ہیں تو اس کا مطلب ہم ،رسول ہیں کیوں کہتے ہیں؟ جب کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم اس دنیا میں ہیں ہی نہیں؟ اس کا مطلب ہمیں رسول تھے کہنا چاہیے؟ اور کیا اللہ کے ولی مرتے ہیں یا اپنی قبر میں زندہ رہتے ہیں؟

    سوال:

    جناب سب سے پہلے میں آپ کو اتنی اچھی ویب سائٹ چلانے کے لیے مبارک باد پیش کرتاہوں۔ میرا سوال یہ ہے کہ ہم لوگ کہتے ہیں کہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم اس دنیا سے چلے گئے ہیں یعنی مر گئے ہیں؟ تو لاالہ الا اللہ محمد رسول اللہ کا معنی اللہ کے سوا کوئی معبود نہیں اور محمد صلی اللہ علیہ وسلم اس کے رسول ہیں۔ اگر حضور صلی اللہ علیہ وسلم مر گئے ہیں تو اس کا مطلب ہم ،رسول ہیں کیوں کہتے ہیں؟ جب کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم اس دنیا میں ہیں ہی نہیں؟ اس کا مطلب ہمیں رسول تھے کہنا چاہیے؟ اور کیا اللہ کے ولی مرتے ہیں یا اپنی قبر میں زندہ رہتے ہیں؟

    جواب نمبر: 11866

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 671=563/د

     

    احادیث سے ثابت ہے کہ انبیاء کرام علیہ الصلاة والسلام اپنی قبروں میں زندہ ہیں، ان کی حیات برزخی ہے، اور آپ صلی اللہ علیہ وسلم بھی قبر میں زندہ ہیں اور چونکہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم کی رسالت قیامت تک کے لیے ہے، اس لیے محمد رسول اللہ یعنی محمد صلی اللہ علیہ وسلم اللہ کے رسول ہیں، کہنا درست ہے۔ انبیاء اور شہداء کے لیے زندہ ہونا نصوص سے ثابت ہے، اولیاء کے لیے ایسی کوئی نص نہیں ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند