• معاملات >> سود و انشورنس

    سوال نمبر: 67112

    عنوان: موبائل فائنانس کمپنی کا فائل چارج یا کسی اور نام سے الگ سے رقم لینا

    سوال: میرا سوال یہ ہے کہ میں موبائل فائنانس کرواتاہوں، بجاج فائنانس یا کسی اور کمپنی سے جو کہتی ہے کہ زیروپرسینٹ سود ہے، 25000 روپئے کا موبائل 25000 روپئے میں اور کوئی پیسہ نہیں، لیکن شروع میں یہ کمپنی کچھ پیسے لیتی ہے ، 700-1000 روپئے جسے یہ لوگ فائل چارچ یا پروسیسنگ فیس(طریق کار کی فیس) کہتی ہے۔ سوال یہ ہے کہ کیایہ دینا جائز ہے یا نہیں؟

    جواب نمبر: 67112

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 1155-1232/L=11/1437 فائل چارج یا کسی اور نام سے الگ سے رقم لینا جائز نہیں؛ البتہ اگر یہ کمپنی نقد سامان دینے کے مقابلہ ادھار سامان فروخت کرنے کی صورت میں کچھ زائد رقم لے تو اس طرح کرنا جائز ہوگا بشرطیکہ معاملہ کے وقت ثمن اور مدت کی تعیین کردی جائے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند