• معاملات >> سود و انشورنس

    سوال نمبر: 605691

    عنوان:

    رقم دے کر ہر مہینے منافع کے نام سے ایک متعین رقم لینا؟

    سوال:

    میں نے اپنے بڑے بھائی کو تجارت کرنے کے لئے 17 لاکھ روپے دئے ہر مہینہ اچھا منافع کما لیتے ہیں ، ہرمہینہ مجہے منافع میں سے 40 ہزار روپیے دیتے ہیں اور بھائی کا کہنا ہے کہ 17 لاکھ میرے کروبار میں لگا رہنے دو میں ہر مہینہ 40 ہزار دیتا رہوں گا آپ مجھے بتاییں کہ 40 ہزار ہر مہینہ لینا جائز ہے یا یہ سود میں سمجھا جا ئے گا؟

    جواب نمبر: 605691

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa:1150-889/L=12/1442

     محض رقم دے کر ہر مہینے منافع کے نام سے ایک متعین رقم لیتے رہنا جائز نہیں یہ سود میں داخل ہے ؛ البتہ اگر آپ نفع کمانا چاہتے ہیں تو آپ اپنے بھائی سے شرکت کامعاملہ کرلیں اور شرکت کا معاملہ کسی عالم سے صحیح طور پر سمجھ لیں، شرکت کا معاملہ ہوجانے کے بعد حسبِ شرائط نفع لینے کی گنجائش ہوگی ۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند