• معاملات >> سود و انشورنس

    سوال نمبر: 602060

    عنوان:

    بنک سے قرض لینا

    سوال:

    ہم جاپان میں رہائش پزیر ہیں۔ کورنا وباء کی وجہ سے جاپان گورنمنٹ لوگوں کو قرض دے رہے ہیں۔ اس قرض کے شرائطوں میں سے ایک شرط یہ ہے ۔ کہ اپ نے دو سال میں اس قرض کو واپس کرنا ہے ۔ بلا سود کے ۔ ہاں اگر اپ نے دو سال میں قرض واپس نا کیا تو اپ نے سود سمیت قرض واپس کرنا ہوگا۔ اپ نے قرض لیتے وقت ان کے ساتھ اس تحریر پر دستخط کرنا پڑے گا۔ کہ دو سال میں قرض کی واپسی بلاسود ہوگی۔ اگر دو سال میں قرض واپس نا کیا تو سود سمیت دینے کا پابند ہوگا۔ پوچھنا یہ ہے ۔ کیا ہم اس قرض کو لے سکتے ہیں؟ یا نہیں جزاک اللہ خیرا

    جواب نمبر: 602060

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa : 368-321/M=05/1442

     صورت مسئولہ میں اگر آپ قرض لے کر دوسال کے اندر مکمل قرض ادا کردیتے ہیں تو سود دینے کا گناہ نہیں ہوگا لیکن مذکورہ شرط کے ساتھ قرض لینے میں سودی معاملہ پر رضامندی پائی جاتی ہے اور اس بات کا بھی امکان ہے کہ سود دینے کی نوبت آجائے اس لیے سلامتی اِسی میں ہے کہ اس طرح کا قرض نہ لیا جائے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند