• معاملات >> سود و انشورنس

    سوال نمبر: 51963

    عنوان: موبائل کمپینوں کا ایڈوانس لون دینا اور واپسی کے وقت اضافی رقم لیناکیسا ہے ، کیا یہ سود ہے یا نہیں

    سوال: محترم جناب مفتی صاحب میری اس بارے مین رہنماء فرمائین کے موبائل کمپینوں کا ایڈوانس لون دینا اور واپسی کے وقت اضافی رقم لیناکیسا ہے ، کیا یہ سود ہے یا نہیں ، کونکہ ایک تو یہ اضافی رقم لینا ہوا جو کہ کھلم کھلا سود ہے ، جبکہ اگر قرض تصور کیں تو اگر قرض پر اضافی رقم لی جائے تو نفع کی وجہ سے ہی بھی سود ہے ۔۔ جبکہ جامعہ بوری ٹاؤ ن کراچی کا جدید فتوی جواز کا آیا ہے ، حوالہ ماہنامہ بینات صفحہ 72 ربیع الاول 1435 ھ فروری 2014

    جواب نمبر: 51963

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 645-645/M=5/1435-U موبائل کمپنیوں کا ایڈوانس لون دیکر واپسی کے وقت اضافی رقم لینا یہ سود کے دائرے میں نہیں آتا ،کیونکہ کمپنی کی طرف سے لون ملنے کی شکل یہ ہوتی ہے کہ اس کی طرف سے جو بیلنس موبائل میں ٹرانسفر کیا جاتا ہے وہ در حقیقت گفتگو کا حق دیا جاتا ہے وہ روپیہ کی شکل میں وصول نہیں کیا جاسکتا، پس جانبین سے اتحاد جنس نہیں پایا جاتا اس لیے اضافی رقم پر سود کا حکم نہیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند