• معاملات >> سود و انشورنس

    سوال نمبر: 49402

    عنوان: موجود رقم میں کچھ ملاوٹ یقینا سود کی بھی ہے، اصل رقم کا تعین نہیں ہے، سود کو کیسے علیحدہ کیا جائے اور کہاں خرچ کیا جائے؟

    سوال: میرے والد صاحب کا انتقال ہوگیا ہے، ان کا بینک میں PLS Saving اکاوٴنٹ تھا۔ اکاوٴنٹ میں موجود رقم میں کچھ ملاوٹ یقینا سود کی بھی ہے، اصل رقم کا تعین نہیں ہے، سود کو کیسے علیحدہ کیا جائے اور کہاں خرچ کیا جائے؟

    جواب نمبر: 49402

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 1875-1375/H=1/1435-U بینک کے ذمہ داران سے تحقیق کرلیں، اصل رقم جمع کردہ کو تمام ورثہٴ شرعی پر علی قدر حصصہم تقسیم کردیں اور سودی رقم کو نکال کر غرباء فقراء مساکین کو بلانیت ثواب وبال سے بچنے کی نیت کرکے دیدیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند