• متفرقات >> حلال و حرام

    سوال نمبر: 67861

    عنوان: کسی بیماری سے شفا کے لیے عورت کا دودھ پینا؟

    سوال: مجھے چنبل /اپرس کی بیماری ہے، میں نے بہت ساری دوائیاں کھائی، مگر صحیح نہیں ہوا، میں نے سنا ہے کہ چھاتی کا دودھ اس بیماری کے لیے بہت مفید ہے۔ سوال یہ ہے کہ کیا کسی عورت کی چھاتی کادودھ پی سکتاہوں؟کیا یہ میرے لیے حلال ہے یا حرام؟لیکن میں چھاتی میں منہ لگا کر دودھ پینا نہیں چاہتاہوں بلکہ کسی دودھ پلانے والی عورت کی چھاتی سے ڈبے میں دودھ نکال کو پیوں تو کیا اس طرح پی سکتاہوں یا نہیں؟ اور فرض کریں کہ اگر پینا حلال ہے تو کیا میں کسی غیر مسلم عورت کا دودھ کا پی سکتاہوں؟

    جواب نمبر: 67861

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 1193-1117/B=12/1437

    کسی مسلمان یا غیر مسلم عورت کی چھاتی سے آپ کے لیے دودھ جائز نہیں، یہ حرام ہے۔ چھاتی سے ڈبے میں نکال کر پینا بھی حرام ہے، حرام چیز سے شفاء نہیں ہوتی ہے، جس نے آپ کو یہ نسخہ بتایا اس نے صحیح نہیں بتایا۔ آپ کسی ماہر طبیب سے رجوع کریں اور اس کا علاج کریں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند