• متفرقات >> حلال و حرام

    سوال نمبر: 608170

    عنوان: کسی چیز پر شرعی حکم لگانے کے لیے یقینی طور پر اس کے بارے میں علم ہونا چاہئے

    سوال:

    سوال : کیا فرماتے ہیں حضرات علماء کرام ومفتیان شرع متین مسئلہ ذیل کے بارے میں کہ بازار میں چمڑے کی اشیاء ملتی ہیں اور وہ کمپنی جیسے ریڈ چیف (red chief and wood land ووڈ لینڈ) کے نام سے اور ہم یوٹوب اور گوگل میں تحقیق سے معلوم ہوا کہ یہ کمپنی والے گائے اور دوسرے جانوروں کے چمڑے سے بناتے جیکیٹ بیگ بیلٹ وغیرہ... بعض لوگوں کا کہنا ہے کہ وہ کبھی خنزیر کے چمڑے کا استعمال بھی کر دیا کر تے ہیں تو ایسی صورت میں کیا حکم ہے ؟

    برائے مہربانی رہنمائی فرمائیں۔

    جواب نمبر: 608170

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa : 559-465/B=05/1443

     کسی چیز پر شرعی حکم لگانے کے لیے یقینی طور پر اس کے بارے میں علم ہونا چاہئے، بعض مجہول لوگوں کے کہنے پر کوئی شرعی حکم نہیں لگایا جاسکتا۔ دو مستند مسلمان ماہر کے ذریعہ پہلے عینی مشاہدہ کرانے کے بعد ان کی رپورٹ بھیجیں، اگر ہمیں اس رپورٹ پر یقین آیا تو ہم کوئی شرعی حکم لگائیں گے ورنہ عینی مشاہدہ کے بعد ہی ہم کوئی شرعی حکم لگاتے ہیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند