• متفرقات >> حلال و حرام

    سوال نمبر: 603181

    عنوان:

    آن لائن ایک خاص طریقہ پر کمانا

    سوال:

    حضرات مفتیان کرام ایک مسئلہ درپیش ہے ۱: کہ پے ٹی ایم وغیرہ میں کچھ اس طرح کا آفر ہوتا ہے کہ اگر آپ اپنی پے ٹی ایم وائلٹ میں ایک ہزار روپیہ ایڈ کریں گے تو آپ کو سو روپے تک کا کیش بیک مل سکتا ہے اسی طرح اگر آپ کسی کو ایک ہزار روپے سینڈ کریں گے تو آپ کو سو روپے تک کا کیش بیک مل سکتا ہے چنانچہ ہم اپنی پے ٹی ایم ا وائلٹ میں بلا ضرورت پیسے ایڈ بھی کرتے ہیں اور دوسرے کو بھیجتے بھی ہے صرف اس وجہ سے کہ یہ آفر ہمیں حاصل ہو

    ۲: اسی طرح بعض اپلیکیشن ایسے ہیں کہ جن میں رجسٹریشن کرنے پر کچھ پیسے ملتے ہیں تو ہم ایسے کرتے ہیں کہ بار بار نمبر بدل کر رجسٹریشن کرتے رہتے ہیں تاکہ یہ پیسے ہمیں بار بار حاصل ہو تو کیا ہمارے لئے ایسا کرنا شرعاً درست ہے ؟ مفصل و مدلل جواب عنایت فرمائیں۔

    جواب نمبر: 603181

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa:530-413/N=7/1442

     (۱): پے ٹی ایم وائلٹ میں پیسے ایڈ کرنے اور جمع کرنے پر جو کیش بیک ملتا ہے، وہ سود اور ناجائز ہے اور پے ٹی ایم کے ذریعے ایک اکاوٴنٹ سے دوسرے اکاوٴنٹ میں پیسے ٹرانسفر کرنے پر جو کیش بیک ملتا ہے، وہ جائز ہے؛ البتہ کیش بیک حاصل کرنے کے لیے محض حیلے کے طور پر پے ٹی ایم کے ذریعے پیسے ٹرانسفر کرنا خلاف دیانت ومروت ہے؛ لہٰذا اس سے احتراز چاہیے۔

    (۲): محض حیلے کے طور پر یہ کام بھی خلاف دیانت ومروت ہے؛ لہٰذا اس سے بھی احتراز چاہیے ۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند