• متفرقات >> حلال و حرام

    سوال نمبر: 59060

    عنوان: حکومت کی اجازت کے بغیر کاروبار کرنا جائز ہے؟

    سوال: حکومت کی اجازت کے بغیر کاروبار کرنا جائز ہے؟ یعنی بغیر لائسینس کے؟ کیا اس سے حاصل ہونے والی آمدنی حلال ہوجائے گی یا حرام؟ اس طرح لائسینس کے بغیر کاروبار سے ٹیکس نہیں دیا جاسکتاہے؟ تو کیا بغیر لائسینس بغیر ٹیکس ادا کئے کمائی حرام ہوگی یا حلال؟ براہ کرم، قرآن وحدیث کی روشنی میں جواب دیں۔

    جواب نمبر: 59060

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 774-751/H=7/1436-U حکومت کی اجازت کے بغیر جائز کاروبار سے حاصل ہونے والی آمدنی حلال ہے، البتہ کسی مسلک میں رہتے ہوئے وہاں کے قوانین کی جب تک کہ خلافِ شرع نہ ہوں پاسداری کرنی چاہیے اور خود کو پریشانی وخطرہ سے بچانا چاہیے۔ عن حذیفة قال قال رسول اللہ -صلی اللہ علیہ وسلم- لا ینبغي للموٴمن أن یذل نفسہ قالوا وکیف یذل نفسہ قال یتعرض من البلاء لما لا یطیق․ (ترمذي ۲/۵۱)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند