• متفرقات >> حلال و حرام

    سوال نمبر: 55425

    عنوان: جوس کمپنی كے لیے سود پہ قرض لینے كے لیے صرف لیٹر لکھنا اور سسٹم میں ریکارڈ کرنا ؟

    سوال: میں الریاض، سعودی عرب میں ایک جوس کی کمپنی میں اکاؤنٹنٹ کی جاب کرتا ہوں . یہاں میرا مینجر مجھے قرض کے پیپرز لکھنے اور اس قرض کی جرنل انٹری پاس کرنے ( یعنی ریکارڈ کرنے ) کا کام دیتا ہے جب کے کمپنی یہ قرض اپنے سپلائرز کی پینڈنگ پیمنٹ کو ادا کرنے کے لیے ایک ہفتہ میں 4 یا 5 قرض ضرور لیتی ہے اور سود پر لیتی ہے۔ سوال یہ پوچھنا تھا کے میرے لیے کیا یہ جائز ہے کے میں قرض لیٹر ٹائپ کروں اور پِھر اس کو پوسٹ یا ریکارڈ کروں سسٹم پر ؟ آپ کی طرف سے جواب کا منتظر رہوں گا۔

    جواب نمبر: 55425

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 55-55/Sn+11/1435-U حدیث میں سودی لین دین کی لکھا پڑھی کرنے والے پر لعنت کی گئی ہے، حضرت عبد اللہ بن مسعود رضی اللہ عنہ سے مروی ہے: ان رسول اللہ -صلی اللہ علیہ وسلم- لعن آکل الربا وموٴکلہ وشاہدیہ وکاتبہ (ابن ماجہ، باب التغلیظ في الربا، رقم ۲۲۷۷) صورت مسئولہ میں چوں کہ آپ کو سودی لین دین کے پیپرز تیار کرنے پڑتے ہیں، انھیں حسب ضرورت پوسٹ کرنا پڑتا ہے، نیز سودی حساب کتاب کا رکارڈ رکھنا پڑتا ہے؛ اس لیے آپ کے لیے ایسی ملازمت شرعاً جائز نہیں؛ البتہ اگر ملازمت چھوڑنے پر ناقابل برداشت تنگی میں پڑنے کا اندیشہ ہو تودوسری جائز ملازمت حاصل کرنے کی پوری کوشش کریں اور جب تک نہ ملے دعا واستغفار کرتے رہیں، اور ملتے ہی یہ ملازمت چھوڑدیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند